’اگر دوبارہ یہ کام ہوا تو ہم تم پر حملہ کردیں گے‘ امریکی فوج کے کمانڈر نے روس کو اب تک کی سنگین ترین دھمکی دے دی، دونوں ملک آمنے سامنے آگئے کیونکہ۔۔۔
us military commander attack russia

شام کے شمالی حصے میں واقع ایک امریکی فوجی اڈے کے قریب شامی فضائیہ کی بمباری کے بعد امریکہ نے پہلی بار انتہائی سخت الفاظ میں روس کو خبردار کردیا ہے کہ اگر آئندہ ایسا ہوا تو امریکہ روس پر حملہ کر دے گا۔
 یہ وارننگ بغداد میں تعینات امریکی جرنیل سٹیفن ٹاﺅنسنڈ کی جانب سے جاری کی گئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ شامی صدر بشارالاسد کے جنگی طیاروں نے کرد جنگجوﺅں کی مدد کے لئے شام میں تعینات امریکی افواج کے اڈے کے قریب بمباری کی۔ انہوں نے اس کارروائی کو امریکی مفادات پر براہ راست حملہ قرار دیتے ہوئے خبردار کیا کہ اگر آئندہ ایسا ہوا تو حملہ آور طیاروں کو واپس نہیں جانے دیا جائے گا اور روس کے خلاف بھی سخت ترین کاروائی کی جائے گی۔مزیدپڑھیں:’اس ایک چیز نے اُسے انسان سے جنسی درندہ بنادیا‘ اغواءکے 9 ماہ تک قید میں بار بار ریپ کا نشانہ ہونے والی لڑکی نے اغواءکار کے بارے میں ایک بات ایسی کہہ دی کہ پوری دنیا کو سوچنے پرمجبور کردیا

ان کا کہنا تھا کہ روس کو واضح الفاظ میں بتادیا گیا ہے کہ امریکی فوجی شام میں کس جگہ موجود ہیں، تاکہ آئندہ اس علاقے کو نشانہ نہ بنایا جائے۔ انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ چونکہ روس صدر بشارالاسد کا اتحادی ہے لہٰذا امریکہ نے اپنے تحفظات کے بارے میں روس کو آگاہ اور خبردار کیا ہے ۔واضح رہے کہ بشارالاسد کی فضائیہ کے طیاروں نے شمالی شام میں امریکی اڈے کے قریب بمباری کی تھی۔ امریکی حکام کا کہنا ہے کہ شامی ائیرفورس کے دو SU-24 طیاروں نے بمباری کی لیکن جب ان کے تعاقب میں امریکہ نے اپنے F-22جنگی طیارے روانہ کئے تو یہ فرار ہوگئے، جس کے بعدامریکہ کا کہنا ہے کہ اگر آئندہ ایسا ہوا تو ذمہ دار روس ہو گا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں