یہ تمام شہری تیار ہوکر کیا چیز حاصل کرنے کے لئے ایک دوسرے پر مکے برسارہے ہیں؟ ایسی وجہ کہ انسانی عقل دنگ رہ جائے
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
reason citizen

یہ تمام شہری تیار ہوکر کیا چیز حاصل کرنے کے لئے ایک دوسرے پر مکے برسارہے ہیں؟ ایسی وجہ کہ انسانی عقل دنگ رہ جائے

جس طرح مسلمان خدا سے سلامتی و خوشحالی کی دعا کرتے ہیں اسی طرح دنیا میں دیگر مذاہب کے ماننے والے بھی اپنے اپنے عقیدے کے مطابق خوشحالی و خوش بختی کے لیے رسومات ادا کرتے ہیں، مگر بعض علاقوں میں یہ رسومات اتنی عجیب و غریب ہیں کہ انہیں دیکھ کر انسان دنگ رہ جاتا ہے۔ جنوبی امریکہ کے ملک بولیویا (Bolivia)میں لوگ اپنی خوشحالی کی دیوی ”پچماما“ (Pachamama) کو خوش کرنے کے لیے سال میں ایک دن خوب سج دھج کر باہر آتے ہیں اور پھر ایک دوسرے کے دست و گریباں ہو جاتے ہیں، جتنا ہو سکے ایک دوسرے پر تشدد کرتے ہیں اور خون بہاتے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ اس سے دیوی خوش ہوتی ہے اور بدلے میں وہ ان کی فصلوں اور کاروبار کو خوشحالی بخشتی ہے۔ یہ رسم خاص طور پر بولیویا کے دیہی علاقوں میں پائی جاتی ہے۔ برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق ایک برطانوی صحافی نے بولیویا کے قصبے میکا(Macha) میں اس رسم کی کوریج کی اور اس کی تصاویر یونین میگزین میں شائع کرکے دنیا کو اس عجیب و غریب رسم سے متعارف کروایا۔ رپورٹ کے مطابق اس لڑائی میں مرد ہی نہیں بلکہ خواتین بھی ایک دوسرے پر بہیمانہ تشدد کرتی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق یہ لوگ اس تیار ہو کر اپنے مذہبی مقامات میں پہنچتے ہیں اور بسا اوقات سبھی ایک ساتھ ایک دوسرے سے لڑنے لگتے ہیں یا بعض جگہوں پر ایک ایک کرکے لڑائی کرتے ہیں اور باقی کھڑے دیکھتے رہتے ہیں۔ اس لڑائی کے دوران کوئی زیور یا کسی بھی قسم کا ہتھیار لیجانا منع ہوتا ہے۔ صرف ہاتھوں اور لاتوں سے کوئی جس کو جتنا پیٹ لے پیٹ سکتا ہے۔ بولیویا مقامی زبان میں اس رسم کو ”ماچو ٹنکو“(Machu Tinku) کا نام دیا گیا ہے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں