نیٹو اور ناروے نے ترکی سے معافی مانگ لی
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
nato president turkey

ترکی کی طرف سے ترک سیاسی رہنماؤں کی ناروے میں فوجی مشقوں کے دوران بانی قائد مصطفی کمال اتاترک کی دشمن کے طور پر تصویر لگا نے اور سوشل میڈیا پر ترک صدر طیب رجب اردوگان کے نام سے جعلی اکاؤنٹ سے نیٹو مخالف پیغامات بھی بھیجنے پر احتجاج کرتے ہوئے نیٹو کی فوجی مشقو ں سے علیحدگی پر ناروے کے وزیرِ دفاع نے اس واقعے کے بعد معافی مانگ لی۔

ہفتہ کوان واقعات کے ردِ عمل میں ترکی نے مشقوں میں شریک اپنے 40فوجیوں کو واپس بلا لیا ،نیٹو میں ترکی کی دوسری بڑی فوج ہے اور ترکی دولتِ اسلامیہ کیخلاف اتحاد اور افغانستان میں نیٹو مشن دونوں کا حصہ ہے۔ناروے کے وزیرِ دفاع نے واقعے پر معافی مانگتے ہوئے ذمہ داری انفرادی شخص پر ڈالتے ہوئے کہا ملوث ناورے کا فوجی ایک ٹھیکیدار تھا جسے ان مشقوں کیلئے رکھا گیا تھا، واقعہ کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔ادھر نیٹو کے سیکرٹری جنرل جنز سٹولٹنبرگ نے بھی اس حوالے سے معافی مانگی ہے اور ترکی کو نیٹو کے فوجی اتحاد کا اہم حصہ قرار دیا ہے ۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں