انسٹاگرام میں ڈائریکٹ میسج کی ویب پر آزمائش شروع
messages test instagram

اب تک انسٹاگرام میں صارفین ایک دوسرے سے چیٹ موبائل ایپ پر ہی کرسکتے تھے مگر اب یہ فیچر ڈیسک ٹائپ اور موبائل ویب پر بھی متعارف ہونے والا ہے۔

ایپ ریسرچر جین وونگ نے اس حوالے سے ٹوئیٹ کرتے ہوئے بتایا کہ انسٹاگرام کی جانب سے ڈائریکٹ میسج کی آزمائش ڈیسک ٹاپ اور موبائل ویب ورژن پر کی جارہی ہے۔ اس وقت ڈیسک ٹاپ پر انسٹاگرام میں لائیک، کمنٹ اور تصاویر سرچ کرنا تو ممکن ہے مگر دوستوں کو ڈائریکٹ میسج بھیجنا اور تصاویر اپ لوڈ نہیں کی جاسکتیں۔

 

 

 

مگر اب اس میں متعدد نئے فیچرز کا اضافہ ہورہا ہے جیسے نوٹیفکیشن سپورٹ کو گزشتہ سال ستمبر میں شامل کیا گیا۔ انسٹاگرام کے مطابق کمپنی کا ڈیسک ٹاپ ورژن میں تصاویر یا اسٹوریز اپ لوڈ کرنے کی سہولت متعارف کرانے کا کوئی منصوبہ نہیں۔ تاہم ڈائریکٹ میسج کی ویب پر آمد ایک بڑی پیشرفت ہے جو پہلے صرف موبائل ایپ میں استعمال کرنا ممکن تھا۔ انسٹاگرام کی جانب سے ویب ورژن پر توجہ دینے کی متعدد وجوہات ہیں۔ ایک تو انسٹاگرام ایک اسٹینڈ آلون میسجنگ ایپ ڈائریکٹ بنانے پر کام کررہی ہے جس کی آزمائش 2017 میں 6 ممالک میں ہوئی اور اب ڈائریکٹ میسج ڈیسک ٹاپ کر فراہم کرنا اس بات کا عندیہ ہے کہ میسجنگ اس اپلیکشن کے لیے کافی اہمیت اختیار کرچکی ہے۔ اس سے ہٹ کر بھی یہ تبدیلی فیس بک کی جانب سے میسنجر، واٹس ایپ اور انسٹاگرام ڈائریکٹ میسج کو اکھٹا کرنے کی جانب پہلا قدم ہے۔ انسٹاگرام کے مطابق فی الحال ڈیسک ٹاپ پر میسجنگ کے فیچر کی آزمائشی لوگوں میں نہیں کی جارہی بلکہ اندرونی طور پر اس پر کام ہورہا ہے۔

 

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں

 

 

مگر اب اس میں متعدد نئے فیچرز کا اضافہ ہورہا ہے جیسے نوٹیفکیشن سپورٹ کو گزشتہ سال ستمبر میں شامل کیا گیا۔ انسٹاگرام کے مطابق کمپنی کا ڈیسک ٹاپ ورژن میں تصاویر یا اسٹوریز اپ لوڈ کرنے کی سہولت متعارف کرانے کا کوئی منصوبہ نہیں۔ تاہم ڈائریکٹ میسج کی ویب پر آمد ایک بڑی پیشرفت ہے جو پہلے صرف موبائل ایپ میں استعمال کرنا ممکن تھا۔ انسٹاگرام کی جانب سے ویب ورژن پر توجہ دینے کی متعدد وجوہات ہیں۔ ایک تو انسٹاگرام ایک اسٹینڈ آلون میسجنگ ایپ ڈائریکٹ بنانے پر کام کررہی ہے جس کی آزمائش 2017 میں 6 ممالک میں ہوئی اور اب ڈائریکٹ میسج ڈیسک ٹاپ کر فراہم کرنا اس بات کا عندیہ ہے کہ میسجنگ اس اپلیکشن کے لیے کافی اہمیت اختیار کرچکی ہے۔ اس سے ہٹ کر بھی یہ تبدیلی فیس بک کی جانب سے میسنجر، واٹس ایپ اور انسٹاگرام ڈائریکٹ میسج کو اکھٹا کرنے کی جانب پہلا قدم ہے۔ انسٹاگرام کے مطابق فی الحال ڈیسک ٹاپ پر میسجنگ کے فیچر کی آزمائشی لوگوں میں نہیں کی جارہی بلکہ اندرونی طور پر اس پر کام ہورہا ہے۔

 

" }