خدا کا شکر ہے بچی بازیاب ہوگئی،چیف جسٹس ثاقب نثار
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
tayyaba recovered

طیبہ تشدد ازخود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران بچی کے والد اعظم نے کہا کہ وہ اردو نہیں بول سکتے ۔چیف جسٹس نے کہا کہ آپ کے ساتھ پنجابی میں بات کروں گا ۔

چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ خدا کا شکر ہے کہ بچی بازیاب ہوگئی ہے۔عدالت نے بچی کے تمام دعویداروں کے بیانات ریکارڈ کرنے کا حکم دیا ہے۔سماعت کے دوران بچی کے دعوے دار والدین اعظم اور اہلیہ بھی احاطہ عدالت میں موجود ہیں۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ بچی اسلام آباد کیسے پہنچی؟بچی کے والد اعظم نے جواب دیا کہ نادرہ بی بی بچی کو کام دلوانے کا کہہ کر لے گئی تھی۔ نادرہ نے کہا تھا کہ بچی فیصل آباد سے باہر نہیں جائے گی ،بچی کا کی ذمہ داری گھر میں بچوں کو کھلانا ہوگی۔اعظم نے سپریم کورٹ میں بتایا کہ وہ جڑانوالہ کے رہنے والے ہیں۔بچی کو طیبہ تشدد کیس کی سماعت سپریم کورٹ کا دورکنی بنچ کررہا ہے ۔بنچ میں چیف جسٹس ثاقب نثار اور جسٹس عمر عطا بندیال کیس کی سماعت کررہے ہیں۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں