کیا بلوچستان میں تبدیلی کے پیچھے کوئی سازش تھی؟؟
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
pressure condition balochistan

’بلوچستان میں حالیہ سیاسی بحران کی وجہ کوئی سازش یا دباؤ نہیں‘

سینئر تجزیہ کار جنرل (ر) امجد شعیب نے کہا ہے کہ بلوچستان میں حالیہ سیاسی بحران کی وجہ کوئی سازش یا دباؤ نہیں، بلکہ یہ خود ان کا اپنا آپس کا کھیل ہے، تاکہ عام انتخابات سے پہلے دوسرے لوگوں کو بھی حکومت کرنے کا وقت مل سکے۔امجد شعیب کا کہنا تھا کہ اب عام انتخابات میں وقت کم ہے اور جو کچھ ہوا، اس کی وجہ باقی لوگوں کو بھی وقت دینا ہے اور اسی لیے لیگی اراکین نے ایک کمزور شخص کو وزیراعلیٰ کے طور پر آگے لانے کے لیے ووٹ دیا۔ انہوں نے بلوچستان کے سیاسی حالات کے پیچھے کسی بھی سازش یا دباؤ کے تاثر کو سختی سے رد کرتے ہوئے واضح کیا کہ گذشتہ چند ماہ سے ایک ہی بات کی جارہی ہے اور اشارے صرف ملکی اداروں کی جانب ہوتے ہیں، جس کا مقصد صرف اپنی ناکامی کو پسِ پردہ رکھنا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ 'جن لوگوں کا خیال تھا کہ بلوچستان میں عدم اعتماد کی تحریک کی وجہ مسلم لیگ (ن) کے اراکین پر دباؤ ہے تو انہیں چاہیے کہ پھر ادارے کا نام بھی لیں جن سے ان کو خطرہ محسوس ہورہا ہے، تاکہ عوام کو بھی معلوم ہوسکے کہ آخر سازش کی باتوں کے پیچھے اصل حقائق کیا ہیں'۔ امجد شعیب نے کہا کہ ثناء اللہ زہری کی مخالفت کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ انہوں نے اپنے دورہِ اقتدار میں بلوچستان کو کبھی وقت ہی نہیں دیا اور زیادہ تر ان کی مصروفیات لندن یا پھر کراچی میں رہتی تھیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ ساڑے چار سال میں حکومت نے اپنی خامیوں اور غلطیوں کو پسِ پردہ رکھنے کی خاطر میڈیا پر آکر سازشوں اور دباؤ کے تاثر کو جنم دیا، جس کا حقیقت سے ذرا بھی کوئی تعلق نہیں اور انہیں معلوم ہے جس دن انہوں نے نام لے کر بات کی تو پھر دوسری جانب سے کافی سخت جواب آئے گا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں