علیم خان کے بعد پرویز خٹک کی گرفتاری کی خبر آتے ہی پورے ملک میں ہلچل مچ گئی
parvez khatak arrest nabeel gabol

 نبیل گبول کا کہنا ہے کہ ایک ماہ بعد عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد آسکتی ہے، یہ انڈر ٹوئنٹی حکومت ہے، حکومتی کارکرردگی کی وجہ سے عوام کے ساتھ پارٹی کے اندر بھی لوگ پریشان ہیں پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما سردارنبیل گبول نے علیم خان کی گرفتاری پر بات کرتے ہوئے کہا کہ ابھی تو شروعات ہے ابھی بہت ساری گرفتاریاں ہونے والی ہیں۔
 

انہوں نے مزید انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ جن کی وزرا کی گرفتاری ہونے والی ہے اس میں سرفہرست وزیر دفاع پرویز خٹک ، وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان اور چوہدری پرویز الہی گرفتار ہونے والے ہیں کیوں کہ ان کے خلاف نیب میں ریفرنسز دائر ہوچکے ہیں۔ دوسری جانب سردارنبیل گبول نے تحریک انصاف کی حکومت کو انڈر ٹوئنٹی ٹیم قراردیتے ہوئے کہاہے کہ حکومت کی کارکردگی نہ ہونے کے باعث شیخ رشید استعفیٰ کا سوچ رہے ہیں،حکومتی کارکرردگی کی وجہ سے عوام کے ساتھ پارٹی کے اندر بھی لوگ پریشان ہیں۔ یہ انڈرٹوئنٹی حکومت ہے، ایک ماہ بعد عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد آسکتی ہے، اس بات کو ثابت کرنے کے لیے جلد اسپیکر قومی اسمبلی کے خلاف بھی تحریک عدم اعتماد آرہی ہے۔نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں خصوصی گفتگوکرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ اپوزیشن نے اب طے کرلیا ہے کہ عوام کو مہنگائی، خارجہ پالیسی کے حوالے سے مشکلات سے نکالنا ہے، حکومت نے وعدوں کے مطابق کام نہیں کیا ہے۔انہوں نے کہاکہ ہم کسی سے ڈیل نہیں کررہے بلکہ اپوزیشن کی تمام جماعتوں سے رابطہ رکھے ہوئے ہیں،تحریک انصاف کو وقت دینا چاہتے ہیں لیکن اب تو انہیں لانے والے خود بھی پریشان ہیں۔انہوں نے کہاکہ سانحہ ساہیوال کی ذمہ داری حکومت پر ہی عائد ہوتی ہے، معصوم لوگوں کو گولیاں مارنا اور پھران پرالزامات لگانا حکومت کی نااہلی ہے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں