سپریم کورٹ کا فیصلہ، ملک کی تاریخ میں پہلی بار وہ کام ہو گیا جو آج تک نہ ہوا تھا، پہلی مرتبہ ہوا کہ۔۔۔
panama case supreme court nawaz sharif

 سپریم کورٹ آف پاکستان نے وزیراعظم نواز شریف کو نااہل قرار دیتے ہوئے انہیں فوری طور پر وزارت عظمیٰ چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

سپریم کورٹ کے 5 رکنی بینچ نے الیکشن کمیشن کو ہدایت کی ہے کہ وہ وزیراعظم کو ڈی سیٹ کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کرے۔ سپریم کورٹ نے صدر مملکت سے استدعا کی ہے کہ وہ جمہوریت کا تسلسل کے لئے فوری طور پر عدالتی حکم پر اطلاق یقینی بنانے کے لئے آئینی تقاضے پورے کریں۔سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد وزیراعظم نواز شریف نے عہدہ چھوڑ دیا ہے اور وہ وزیراعظم ہاؤس سے پنجاب ہاؤس منتقل ہوگئے ہیں۔ ان کے وزارت عظمیٰ چھوڑتے ہی وفاقی کابینہ خود بخود تحلیل ہوگئی ہے۔ اس طرح تاریخ میں پہلی بار ملک میں حکومت نہیں ہے۔ آئین کے مطابق قومی اسمبلی کا اجلاس طلب ہونے کے بعد ارکان نئے وزیراعظم کو منتخب کریں گے جو اپنے انتخاب کے بعد اپنی کابینہ بنائے گا۔ اس آئینی عمل کے مکمل ہونے تک ملک کسی حکومت کے بغیر چلتا رہے گا۔ آئینی ماہرین یہ سوال کر رہے ہیں کہ اس صورتحال میں اگر ملک کو خدانخواستہ کسی بحران کا سامنا کرنا پڑ جائے تو کون ہوگا جو اس سے نمٹنے میں اپنا کردار ادا کرے گا۔ کون ہوگا جو قومی اداروں کو اس صورتحال سے نمٹنے کا حکم دے گا۔ مبصرین کا کہنا ہے کہ ملک اس وقت ایک شدید آئینی بحران کا شکار ہے، جس کا فوری تدارک ازحد ضروری ہے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں