بڑی شخصیت نے پی ٹی آئی کو چھوڑنے کا عندیہ دیدیا ، وجہ کیابنی ؟جانئے
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
news release pti

وفاقی وزیر دفاعی پیدوار رانا تنویر حسین نے کہا ہے کہ شیخ رشید (ن) لیگ میں واپس آنا چاہتے ہیں اس لیے ایسی حر کتیں کرتے ہیں ‘

عمران خان ‘طاہر القادری اور چوہدری برادران مل بھی جائے تو فیصلہ آئین اور جمہو ریت کے دائرے میں ہوں گے ‘عمران خان کو سب سے پہلے اپنے ”مزاج “میں تبدلی لانا ہوگی‘ملک کو دھر نوں اور انتشار کی بجائے معاشی ترقی اور استحکام کی ضرورت ہے ‘عمران خان سپر یم کورٹ میں بھی جا رہے ہیں تو انکے پاس سڑکوں پر احتجاج کا کیا جواز ہے ؟کسی بھی سیاسی تنظیم پرپابندی لگانا عدالت کا کام ہے ہم الطاف حسین کے خلاف قانونی کاروائی کر نے کیلئے جائزہ لے رہے ہیں قانون سب کیلئے ایک جیسا ہی ہے ۔پیر کو لاہور میں میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر دفاع پیدوار رانا تنویر حسین نے کہا کہ طاہر القادری اور عمران خان کے احتجاجی دھر نوں کو حال عوام نے پہلے کیا ہے اب بھی انکے ساتھ ایسا ہی سلوک کیا جائیگا اور دھر نوں کی سیاست کر نیوالوں کا اصل ایجنڈہ ملک کو انتشار اور فساد کا شکار کر نا ہے مگرپاکستان کو اس وقت اتحاد اور استحکام کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ عمران خان ‘طاہر القادری‘ چوہدری برادران اور شیخ رشید سب بھی مل جائے تو حکومت کو ان سے کوئی خطر ہ نہیں تمام فیصلے آئین اور جمہو ریت کے مطابق ہوں گے مگر ایسے لوگوں کی وجہ سے ملک ضرورمشکلات کا شکار ہوتا ہے اس لیے انکو چاہیے دھر نوں اور احتجاج کی بجائے پار لیمنٹ میں آکر بات کر یں ۔انہوں نے کہا کہ شیخ رشید(ن) لیگ میں آنے کی کوشش کرتے رہتے ہیں جب انکی کوشش کا میاب نہیں ہوتیں تو پھر وہ (ن) لیگ کے خلاف ایسی حر کتیں کرتے ہیں ۔ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر نے کہا کہ عمران خان کو اپنے مزاج کو تبدیل کر نا ہوگا اوہ ایک طرف پانامہ لیکس کے معاملے پر سپر یم کورٹ جا رہے تودوسری طرف سڑکوں پر احتجاج بھی کر رہے ہیں انکے پاس احتجاج کا پھر کیا جواز ہے ؟۔ الطاف حسین کے متعلق وفاقی وزیر دفاعی پیدوار نے کہا کہ الطاف حسین کے خلاف آئین وقانون کے مطابق کاروائی کر نے کا حکومت جائزہ لے رہی ہے مگرکسی بھی سیاسی تنظیم پر پابندی لگانا عدالت کا کام ہے اور کسی کو بھی پاکستان کے خلاف بات کر نے کی اجازت نہیں ملک میں قانون سب کیلئے قانون ایک جیسا ہی ہے ۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں