نیب نے بڑی شخصیت کیخلاف اہم کام کر نے کی تیا ری کر لی
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
nab lng prime minister

 وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے دست راست عامر نسیم کیخلاف ایل این جی ٹرمینل کنسٹرکشن کا لائسنس اینگرو نامی کمپنی کو دینے پر تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے۔ عامر نسیم وزیراعظم عباسی کا انتہائی قریبی تھا جس کو وہ 3سال کی مدت پوری ہونے کے بعد دوبارہ اوگرا میں تعینات کیا تھا لیکن عدالت عالیہ نے عامر نسیم کی تعیناتی کو معطل کر دیا۔

وزیراعظم عباسی بطور وزیر پٹرولیم اینگرو کمپنی کو ایل این جی ٹرمینل کی تعمیر کا ٹھیکہ اینگرو کمپنی کو دیا پھر اینگرو کمپنی کے سربراہ کو ایم ڈی پی ایس او تعینات کر رکھا ہے۔ اینگرو کمپنی کو ایل این جی کا لائسنس دیتے وقت اوگرا میں سابق ایگزیکٹو ڈائریکٹر یٰسین کو اوگرا سے اغواء کرنے کا واقعہ بھی ہوا تھا جو لائسنس فراہم کرنے میں رکاوٹ تھے ۔ یہ واقعہ بھی پولیس میں درج ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے ایل این جی درآمد کرنے سے قبل پورٹ قاسم پر آر ایل این کا ٹرمینل لگا نے کے لئے اینگرو سے ڈیل کر چکے تھے اور اوگرا میں ذاتی آدمی بھرتی کر کے یہ لائسنس دیا گیا تھا اس سکینڈل میں سابقہ چیئر مین اوگرا بھی ملوث ہے۔ اپوزیشن کا دعویٰ ہے کہ ایل این جی درآمد میں شریف خاندان اور وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے 200ارب کی کرپشن کی ہے نیب حکام اب ایل این جی کی درآمد اور پورٹ قاسم میں ٹرمینل تعمیر کرنے کے تمام معاملات کا جائزہ لے گی۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں