کلبھوشن یادیو کیس،عالمی عدالت نے پاکستان کی نئے ایڈہاک جج کی تعیناتی کی درخواست مستردکردی
kulbhushan world court rejected

عالمی عدالت انصاف نے پاکستان کے ایڈہاک جج تصدیق جیلانی کی طبیعت ناساز ہونے پر نئے ایڈہاک جج کی تعیناتی کی درخواست مسترد کردی اور اٹارنی جنرل انور منصور خان کو اپنے دلائل پیش کرنے کی ہدایت کردی۔

تفصیلات کے مطابق عالمی عدالت انصاف میں کلبھوشن یادیو کیس کی سماعت جاری ہے،پاکستان کی جانب سے اٹارنی جنرل انور منصور خان نے پاکستان کے ایڈہاک جج تصدیق جیلانی کی طبیعت خراب ہونے پر نئے جج کی تعیناتی کی درخواست دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے ایڈہاک جج تصدق کی طبیعت ناساز ہے،تصدق جیلانی ہسپتال میں زیرعلاج ہیں اور ڈاکٹرز نے انہیں آرام کا مشورہ دیا ہے۔اٹارنی جنرل نے درخواست کی کہ عالمی عددالت انصاف میں بھارت کامستقل جج موجود،ہماراایڈہاک جج نہیں،عدالت سے استدعا کرتے ہیں کہ پاکستان کے نئے ایڈہاک جج کو تعینات کیا جائے اور نئے جج کو کیس کی مکمل جانچ پڑتال کیلئے وقت دیا جائے،امید ہے عالمی عدالت ہماری درخواست پر نظرثانی کرے گی ۔عالمی عدالت انصاف نے پاکستان کی متبادل ایڈہاک جج تعیناتی کی درخواست مستردکردی اورپاکستان کو دلائل پیش کرنے کی ہدایت کردی۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں