ایم کیو ایم کا قومی اسمبلی سے مستعفی ہونے کا فیصلہ
decision resignation mqm national assembly

متحدہ قومی مومنٹ نے کراچی میں رینجرز کی جانب سے جاری آپریشن پر تحفظات کے پیش نظر قومی اسمبلی سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

رات گئے ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹیوں کا کراچی اور لندن میں ہنگامی اجلاس منعقد ہوا جس میں کراچی میں رینجرز کی جانب سے جاری آپریشن پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے قومی اسمبلی سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا گیا۔ ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے بھی رابطہ کمیٹیوں کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے کہا کہ کسی فورم پر سنوائی نہیں ہو رہی، اسمبلیوں اور عدالتوں میں کچھ بھی نہیں بولا جا رہا لہذا ایسی صورت حال میں ہمارے پاس استعفوں کے سوا کوئی چارہ نہیں۔ ذرائع کے مطابق پہلے مرحلے میں ایم کیو ایم کے 24 اراکین قومی اسمبلی میں اپنے استعفے پیش کریں جب کہ اگلے مرحلے میں ایم کیو ایم کے 8 سینیٹرز ایوان بالا میں اپنے استعفے پیش کر دیں گے۔ اس کے علاوہ ایم کیو ایم کی اعلیٰ قیادت سندھ اسمبلی اور کشمیر اسمبلی سے بھی مستعفی ہونے کے فیصلے پر غور کر رہی ہے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں