پتھر ہٹانے اور پہاڑ ہلانے کا وقت آچکا: وزیراعظم
china prime minister pakistan

 وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ چوتھا صنعتی انقلاب دستک دے رہا ہے، پتھر ہٹانے اور پہاڑ ہلانے کا وقت آچکا، 2050 میں پاکستان دنیا کی بڑی معیشتوں میں شامل ہو جائیگا۔

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے چین میں باؤ فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہا چین اور پاکستان آئرن برادر ہیں، سی پیک سے لوگوں کو ملازمت ملی، بیلٹ اینڈ روڈ منصوبہ عالمی اہمیت اختیار کر گیا ہے۔ انہوں نے کہا والہانہ مہمان نوازی پر چینی حکومت اور عوام کے شکر گزار ہیں، شی جن پنگ کی سربراہی میں چین تیزی سے ترقی کر رہا ہے، چین کی رہنمائی میں پاکستان میں ترقی کا نیا دور شروع ہوا۔ان کا کہنا تھا ہائی ویز، موٹر ویز پر صنعتی منصوبے سی پیک کا اہم حصہ ہیں، ہماری دلی خواہش ہے کہ چین کے ساتھ تعاون مزید بڑھے۔ وزیراعظم نے کہا انسان آج ٹیکنالوجی کی حدوں کو چھو رہا ہے، ورلڈ ٹریڈ آرڈر ٹوٹ رہا ہے، ایشیا مستقبل کی تجارت کا مرکز ہوگا۔ انہوں نے کہا پاکستان کی شرح نمو سالانہ 6 فیصد کے حساب سے ترقی کر رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا بائیو ٹیکنالوجی نئی دنیا تخلیق کر رہی ہے، انسان آج ٹیکنالوجی کی انتہا کو چھو رہا ہے۔ وزیراعظم نے کہا چین عالمی تجارت میں اہم کردار ادا کر رہا ہے، باؤ فورم دنیا میں ایشیا کا مقام بلند کرنے کے لیے نمایاں پلیٹ فارم ہے، روبوٹکس اور کوانٹم کمپیوٹنگ نے زندگی کو نئی جہت دی، سائنسی ایجادات نے گورننس اور بزنس کے تقاضوں کو بھی بدل دیا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں