دہشتگردی کے مقدمات میں گرفتار 68 افراد کو رہا کیا جائے گایا نہیں ؟
arrest terrorists supreme court

سپریم کورٹ نے فوجی عدالتوں سے دہشت گردی کے الزام میں سزا پانے والے 68 ملزمان کو رہا کرنے کے پشاور ہائیکورٹ کے حکم پر عملدرآمد روک دیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق پشاور ہائیکورٹ نے دہشت گردی کے الزام میں فوجی عدالتوں سے سزا پانے والے 68 ملزمان کی سزا کالعدم قرار دے کر انہیں رہا کرنے کا حکم دیا تھا۔عدالت عظمیٰ میں سماعت کے دوران ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا کہ پشاور ہائیکورٹ نے حقائق کا درست جائزہ نہیں لیا، ملزمان دہشت گردی جیسے سنگین جرائم میں ملوث ہیں لہٰذا فوجی عدالتوں سے سنائی گئی سزاوں کو بحال کیا جائے۔اٹارنی جنرل کی استدعا پر سپریم کورٹ نے پشاور ہائیکورٹ کے حکم پر عملدرآمد روکتے ہوئے ملزمان کی رہائی روک دی ہے اور جیل سپرنٹنڈنٹس کو ملزمان کو رہا نہ کرنے کا حکم دیا ہے۔عدالت نے کیس کی مزید سماعت غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کردی۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں