عبدالستار ایدھی میں انسانیت کی خدمت کا جذبہ کہا ں سے پیدا ہوا ؟ جان کر آپ بھی داد دیں گے
abdul sattar edhi humanity

عبدالستار ایدھی کو 1980میں لبنان جاتے ہوئے اسرائیلی افواج نے گرفتارکیا جبکہ 2006 میں بھی وہ 16گھنٹے کیلیے ٹورنٹو ایئرپورٹ پرزیرحراست رہے،

2008میں امر یکی امیگر یشن حکام نے جان ایف کینیڈی ایئرپورٹ پران کا پاسپورٹ اور دیگر کا غذات پرضبط کرتے ہو ئے کئی گھنٹوں تک تفتیش کی۔ایدھی فاؤنڈیشن انٹرنیشنل کے بانی عبدالستارایدھی کو بچپن سے انسانیت کی خدمت کا شوق تھا جب ان کی عمر محض 11 سال تھی ان کی والدہ کو فالج ہوگیا۔عبدالستار ایدھی نے اپنی والد کی خدمت میں کوئی کسر نہیں چھوڑی اوران کے علاج معالجے سمیت ان کی تمام ضروریات کوپورا کیا اس طرح سے ان میں انسانی خدمت کا جذبہ پیدا ہوتا چلاگیا،ان کی والدہ کی بیماری عبدالستار ایدھی کی زندگی کا اہم موڑ ثابت ہوئی۔عبدالستار ایدھی اپنی والدہ کی خدمت میں مصروف رہتے تھے اوراسی وجہ سے وہ اپنی ہائی اسکول لیول کی تعلیم بھی جاری نہ رکھ سکے،عبدالستار ایدھی کی والدہ کا جب انتقال ہوا اس وقت عبدالستار ایدھی کی عمر محض 19 سال تھی ماں کی طویل بیماری سے عبدالستار ایدھی یہ سوچنے پر مجبور ہوگئے کہ دنیا میں ایسی لاکھوں کروڑوں مائیں ہوںگی جو ان کی والدہ کی طرح بیماری میں مبتلا ہوں گی اور ان میں سے کتنوں کی تیمارداری کرنے والا بھی کوئی نہیں ہوگا۔عبدالستارایدھی نے سوچاکہ انھیں بے بس لوگوں کی مدد کرنی چاہیے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں

متعلقہ خبریں