چاند کا ٹکڑا 6 لاکھ ڈالر میں فروخت
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
piece moon

شمالی افریقہ میں پچھلے سال ملنے والا چاند کا ایک ٹکڑا ایک نیلامی میں چھ لاکھ سے زائد ڈالر میں فروخت ہو گیا ہے۔وسٹن کی ’آر آر‘ نامی کمپنی کے مطابق چاند کے اس ٹکڑے کو اب ویت نام کے ’ٹام چک پگوڈا‘ نامی کمپلیکس میں دیکھا جا سکتا ہے۔ کمپنی کے نائب صدر بوبی لونگسٹن نے خریدار اور بچنے والے دونوں ہی کی شناخت مخفی رکھتے ہوئے بتایا کہ چاند کے ٹکڑے کو ویت نام کے اس کمپلیکس سے منسلک شخصیت نے خریدا ہے۔

’ٹام چک پگوڈا کمپلیکس‘ ویت نام کے جنوبی حصے کے ’نا ہام‘ نامی صوبے میں ایک اہم سیاحتی مقام ہے۔ چاند کا ٹکڑا اس پگوڈا میں نمائش کے لیے رکھا جائے گا اور عام لوگ اسے دیکھ سکیں گے۔ پگوڈا در اصل بدھ مذہب میں عبادت گاہ کو کہا جاتا ہے اور جنوبی ویت نام میں موجود یہ ٹام چک پگوڈا کو ملک بھر میں کافی اہم مانا جانا ہے۔ بدھ راہب وہاں عبادت اور کائنات کے رازوں پر سوچ بچار کرنے کے مقصد سے جمع ہوتے ہیں۔ چاند کے اس ٹکڑے کو ’مون پزل‘ یا ’بواگابا‘ کا نام دیا گیا ہے۔ اس کے چھ ٹکڑے ہیں جنہیں جوڑا جائے تو یہ پزل کی طرح ایک مخصوص شکل اختیار کر لیتے ہیں۔ اس کا وزن تقریباً ساڑھے پانچ کلو ہے۔ پھتریلی شکل میں یہ مادہ ماضی میں کسی وقت چاند کی سطح سے زمین کی طرف نکلا ہو گا۔ پھر یہ 384,000 کلومیٹر کا سفر طے کرتے ہوئے زمین پہنچا اور یہ بھی حیرت کی بات ہے کہ زمین کی کشش ثقل کے سبب جب یہ تیزی سے زمین کی طرف گرا ہو گا تو اسے انتہائی اونچے درجہ حرارت کا سامنا رہا ہو گا۔ یہ موریطانیہ کے ایک ریگستان سے پچھلے سال ملا تھا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں