یہ دردناک کہانی پڑھنے کے بعد آپ بھی دیر تک پیشاب روک کر نہیں رکھیں گے
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
news research health

پیشاب زیادہ دیر تک روکنا اچھی بات نہیں ہے اور اس کے شدید نقصانات ہوسکتے ہیں۔آج ہم آپ کو ایسے شخص کے بارے میں بتائیں گے جس کی سنگین غلطی کے بارے میں جان کر آپ کبھی بھی پیشاب روکنے کی غلطی نہ دہرائیں گے۔
Duke Prostate Center Division of Urologic Surgeryکے ڈائریکٹر اور ماہر ڈاکٹر جیوڈ ڈبلیو مول کا کہنا ہے کہ جب ہم رات کے وقت زیادہ مشروبات یا مائع پینے کے بعد سونے سے قبل ہمارا مثانہ بھر جاتا ہے اور ہم پہلی بار پیشاب کرتے ہیں تو ہمارے دماغ کو اس فعل کے اچھے سگنلز جاتے ہیں ۔جیسے جیسے رات گزرتی ہے ہمارے دماغ سے پیغام آتا رہتا ہے کہ کچھ دیر پہلے تم نے پیشاب کیا ہے جس سے بہت سکون ملا ہے لہذا ایک بار پھر ضرور ایسا کرو۔بار بار غسل خانے جانے سے بچنے کے لئے آپ کوشش کرتے ہیں کہ پیشاب روک لیا جائے جو کہ ایک خطرناک بات ہے۔پیشاب روکنے کے خطرناک اثرات کے بارے میں ڈاکٹر جیوڈ نے اپنی فوج کی زندگی سے سچا واقعہ سناتے ہوئے کہا کہ ایک نوجوان فوجی نے ایک رات بہت زیادہ شراب پی لی تھی ،اس کے مثانے میں تین بوتل وائین (wine)جتنا مائع بھر چکا تھااور یہ ایک بیگ کی طرح پھٹنے کے قریب تھا۔پیشاب روکنے کی وجہ سے اس کے مثانے کو اس قدر شدید نقصان ہوا کہ وہ دوبارہ کبھی بھی نارمل طریقے سے پیشاب نہ کر پاتا تھا اور اس کے مثانے سے پیشاب نکالنے کے لئے چار سے چھ دن تک نالی لگی رہی۔
ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر آپ عوامی باتھ رومز میں پیشاب کرنے سے گھبراتے ہیں تو کچھ دیر تک کے لئے پیشاب روکا جا سکتا ہے لیکن زیادہ دیر تک ایسا کرنا آپ کی صحت کے لئے نقصان دہ ہے اور آپ کا یہ عمل آپ کے مثانے کو کمزور بنادے گا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں