صبح ناشتے میں اس عام چیز کا استعمال چند دنوں میں توند کی چربی گھلادے
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
breakfast fat control

ایسا عام تصور ہے کہ دیسی گھی صحت کے لیے نقصان دہ اور چربی سے بھرپور ہوتا ہے، جس کی وجہ سے جسمانی وزن میں اضافہ آسان ہوجاتا ہے۔

یہ خالص گھی خصوصاً گائے کے دودھ سے بنا گھی ایسے بہترین اجزاءسے بھرپور ہوتا ہے جو کہ صحت مند جسم کے لیے ضروری ہے۔بنانے کا طریقہ یہاں جانیں : گھر میں دیسی گھی بنانا بہت آسان اسی طرح یہ گھی چربی گھلانے والے وٹامنز سے بھی بھرپور ہوتا ہے جبکہ اس میں موجود فیٹی ایسڈز جسمانی وزن میں کمی میں مدد دیتے ہیں۔یہاں تک کہ بولی وڈ اسٹار کرینہ کپور بھی اس کی حمایت کرتی ہیں اور اپنے بیٹے کی پیدائش کے بعد چند مہینوں میں 20 کلو تک وزن کم کرنے میں دیسی گھی نے ان کی مدد کی، جس کا انکشاف انہوں نے انٹرویو میں کیا۔تو اگر آپ توند کی چربی کو گھلانا چاہتے ہیں تو یہ گھی مددگار ثابت ہوسکتا ہےیہ کیسے مدد کرے گا؟ دیسی گھی ایسے اہم امینو ایسڈز سے بھرپور ہوتا ہے جو کہ چربی اور فیٹ سیلز کو سکڑنے میں مدد دیتے ہیں، تو اگر آپ کو لگتا ہے کہ جسم بہت تیزی سے چربی اکھٹا کررہا ہے تو دیسی گھی کا اضافہ مددگار ثابت ہوسکتا ہے۔اسی طرح اس میں لنولینک ایسڈ بھی موجود ہے جو کہ اومیگا سکس فیٹی ایسڈز کی ایک قسم ہے، جس کا استعمال جسمانی وزن میں کمی میں مدد دیتا ہے۔اومیگا سکس فیٹی ایسڈز چربی کا حجم کم کرنے میں بھی مدد دیتا ہے، جس سے توند سے نجات میں مدد ملتی ہے۔دیسی گھی میں اومیگا تھری فیٹی ایسڈز بھی موجود ہیں، جو پھیلتی کمر کو کم کرنے اور چربی گھلانے کے لیے فائدہ مند ہیں۔دیسی گھی کے استعمال کے دیگر فوائد بھی ہیں جیسے نظام ہاضمہ کو بہتر بنانا، جو کہ جسمانی وزن میں کمی میں مزید مدد دیتا ہے۔کس بات کا خیال رکھنا چاہئےاگرچہ دیسی گھی جسمانی وزن میں کمی کےلیے فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے مگر یہ سمجھنے کی ضرورت ہے کہ کسی بھی چیز کا زیادہ استعمال نقصان دہ ہے۔تو دیسی گھی کو اعتدال میں رہ کر غذا کا حصہ بنانا چاہئے اور روزانہ ایک سے 2 چائے کے چمچ دیسی گھی کا استعمال زیادہ سے زیادہ فوائد کے لیے کرنا چاہئے۔اور ہاں اس کی مدد سے آپ توند سے نجات پاسکتے ہیں مگر اس کے بعد صحت بخش غذا اور جسمانی سرگرمیوں کو اپنا معمول ضرور بنائیں تاکہ جسمانی وزن کو مستحکم رکھا جاسکے۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں