خراٹوں کا باعث بننے والی وجہ سامنے آگئی
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
snoring reason

کیا آپ نیند کے دوران خراٹے لیتے ہیں ؟ اگر ہاں تو گلے کے ایک مرض کی وجہ سے بھی ہوسکتا ہے۔

یہ بات سعودی عرب میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔ دمام یونیورسٹی کی تحقیق کے مطابق کسی شخص کے ٹانسلز کا حجم بڑھنا، دندانے دار زبان وغیرہ نیند کے دوران سانس رکنے یا خراٹوں کا خطرہ بڑھا دیتا ہے۔ سلیپ اپنیا نامی اس مرض میں رات کو نیند کے دوران جسم میں آکسیجن کی کم مقدار جذب ہوتی ہے اور سانس چند لمحوں کے لیے رکتی ہے جو خراٹوں کا باعث بنتا ہے۔ خراٹے ویسے تو اتنے نقصان دہ نہیں ہوتے تاہم ان کی شدت بڑحنے سے دماغی افعال پر اثرات مرتے ہیں، دل کے دورے اور ہارٹ فیلیئر، فالج سمیت ڈپریشن جیسے امراض کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔ اس تحقیق کے دوران محققین نے 200 مریضوں کا جائزہ لیا اور خراٹوں کا باعث بننے والے عناصر کے بارے میں جاننے کی کوشش کی۔ نتائج سے معلوم ہوا کہ موٹاپا، بڑے ٹانسلز اور چھالوں جیسی زبان خراٹوں کا باعث بننے والی عام وجوہات ہیں۔ اس تحقیق سے خراٹوں کی روک تھام میں مدد مل سکے گی خاص طور پر ڈینٹسٹ کسی شخص کے ٹانسلز کا حجم بڑھا ہوا دیکھ کر مریض کو کسی ڈاکٹر سے رجوع کرنے کا مشورہ دے سکا گا۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں