قیلولہ یا دوپہر کی نیند کا یہ فائدہ آپ کو حیران کر دے گا
afternoon nap memory benefits amazing

دوپہر کو سونا یاداشت کے لیے بہترین

کیا آپ دوپہر کو سونے یا قیلولے کے عادی ہیں؟ اگر ہاں تو اچھی خبر یہ ہے کہ یہ عادت یاداشت کو بہتر بنانے میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔یہ بات سوئٹزرلینڈ میں ہونے والی ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی ہے۔جنیوا یونیورسٹی کی تحقیق کے مطابق دن کے اوقات میں روزانہ کچھ دیر سونے کو معمول بنالینا ذہنی صحت کو بہتر بناتا ہے۔تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ اس نیند کے دوران یادوں کو ذہن میں نقش ہونے میں مدد ملتی ہے خاص طور پر طالبعلم اگر کچھ یاد کرکے سوجائیں تو وہ ان کے دماغ میں نقش ہوجاتا ہے۔محققین کا کہنا ہے کہ قیلولے کے دوران پڑھنے کے دوران حاصل ہونے والی معلومات کو اپنے اندر نقش کرلیتا ہے کیونکہ نیند کے دوران یہ دماغ کے ان حصوں تک منتقل ہوجاتی ہے جو طویل المعیاد یاداشت سے متعلق ہوتے ہیں۔اس تحقیق کے دوران رضاکاروں پر تجربات کے دوران معلوم ہوا کہ دن میں ڈیڑھ گھنٹے کی نیند یا آرام سے لوگوں کی یاداشت بہتر ہوئی اور انہوں نے کچھ دیر پہلے کی معلومات پر مبنی سوالات کے جوابات بالکل درست دیئے۔اس تجربے کو تین ماہ دوبارہ دہرایا گیا تو انہوں نے اس معلومات کے جوابات ایک بار پھر درست دیئے۔محققین کا کہنا تھا کہ سونے سے دماغ کے یادوں کو تشکیل دینے والے حصے ہپو کیمپس میں زبردست سرگرمیاں دیکھنے میں آئی اور وہ اطلاعات یاداشت کا حصہ بن گئیں۔یہ تحقیق طبی جریدے جرنل ای لائف میں شائع ہوئی۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں